;

١ . اور رات کی قسم جب چھائے (ف۲)

٢ . اور دن کی جب چمکے (ف۳)

٣ . اور اس (ف۴) کی جس نے نر و مادہ بنائے (ف۵)

٤ . بیشک تمہاری کوشش مختلف ہے (ف۶)

٥ . تو وہ جس نے دیا (ف۷) اور پرہیزگاری کی (ف۸)

٦ . اور سب سے اچھی کو سچ مانا (ف۹)

٧ . تو بہت جلد ہم اسے آسانی مہیا کردیں گے (ف۱۰)

٨ . اور وہ جس نے بخل کیا (ف۱۱) اور بے پرواہ بنا (ف۱۲)

٩ . اور سب سے اچھی کو جھٹلایا (ف۱۳)

١٠ . تو بہت جلد ہم اسے دشواری مہیا کردیں گے (ف۱۴)

١١ . اور اس کا مال اسے کام نہ آئے گا جب ہلاکت میں پڑے گا (ف۱۵)

١٢ . بیشک ہدایت فرمانا (ف۱۶) ہمارے ذمہ ہے،

١٣ . اور بیشک آخرت اور دنیا دونوں کے ہمیں مالک ہیں،

١٤ . تو میں تمہیں ڈراتا ہوں اس آگ سے جو بھڑک رہی ہے،

١٥ . نہ جائے گا اس میں (ف۱۷) مگر بڑا بدبخت،

١٦ . جس نے جھٹلایا (ف۱۸) اور منہ پھیرا (ف۱۹)

١٧ . اور بہت اس سے دور رکھا جائے گا جو سب سے زیادہ پرہیزگار،

١٨ . جو اپنا مال دیتا ہے کہ ستھرا ہو (ف۲۰)

١٩ . اور کسی کا اس پر کچھ احسان نہیں جس کا بدلہ دیا جائے (ف۲۱)

٢٠ . صرف اپنے رب کی رضا چاہتا ہے جو سب سے بلند ہے،

٢١ . اور بیشک قریب ہے کہ وہ راضی ہوگا (ف۲۲)