;

١ . جب زمین تھرتھرا دی جائے (ف۲) جیسا اس کا تھرتھرانا ٹھہرا ہے (ف۳)

٢ . اور زمین اپنے بوجھ باہر پھینک دے (ف۴)

٣ . اور آدمی کہے اسے کیا ہوا (ف۵)

٤ . اس دن وہ اپنی خبریں بتائے گی (ف۶)

٥ . اس لیے کہ تمہارے رب نے اسے حکم بھیجا (ف۷)

٦ . اس دن لوگ اپنے رب کی طرف پھریں گے (ف۸) کئی راہ ہوکر (ف۹) تاکہ اپنا کیا (ف۱۰) دکھائیں جائیں تو،

٧ . جو ایک ذرہ بھر بھلائی کرے اسے دیکھے گا،

٨ . اور جو ایک ذرہ بھر برائی کرے اسے دیکھے گا (ف۱۱)